.
.
.
.

سعودی عرب پر بآسانی قبضہ کر سکتے ہیں: رکن ایرانی نیشنل سیکیورٹی

حج کے دوران احتجاجی مظاہروں کی دھمکی

نشر في:

ایران کی پارلیمانی کمیٹی برائے نیشنل سیکیورٹی اور خارجہ پالیسی کمیٹی کے رکن محمد کریم عابدی کا کہنا ہے کہ اگر ہم [ایران] چاہیں تو بآسانی سعودی عرب پر قبضہ کر سکتے ہیں۔

خبر رساں ایجنسی "فارس"کے ذریعے جاری ہونے والے منفرد بیان میں گارڈین کونسل کے رکن آیت اللہ عباس الکعبی نےدھمکی دی ہے کہ امسال حج کے موقع پر بڑے بڑے مظاہرے کئے جائیں گے جن میں بہ قول الکعبی مشرکین سے برات اور عرب انقلابات سے اظہار یک جہتی کیا جائے گا۔

انہوں نے کہا امریکی اور صہیونی کارپرداز اس سال موسم حج پر پریشان ہیں، اسی وجہ سے انہوں نے ایران کے خلاف واشنگٹن میں سعودی سفیر کے قتل کی بہتان باندھی ہے۔

ایرانی عہدیدار کا ردعمل گورنر مکہ ترکی الفیصل کے اس بیان کا جواب ہے جس میں سعودی عہدیدار نے اپنے امریکا میں سفیر عادل الجبیر کے قتل کی مبینہ سازش میں تہران کے ملوث ہونے پر سزا کا مطالبہ کیا تھا۔

امریکی اٹارنی جنرل ایرک نے اس حوالے سے تفصیلات بتاتے ہوئے کہا تھا کہ مبینہ طور پر اس سازش کی تیاری اور معاونت میں ایران شامل ہے۔ تاہم ایرانی حکومت نے ان الزامات کو مسترد کر دیا ہے۔

ایرک ہولڈر نے کہا کہ ابھی تک کی تحقیقات سے معلوم ہوتا ہے کہ اس سازش کا حکم بھی ایران سے ہی دیا گیا تھا، جو نہ صرف امریکا بلکہ بین الاقوامی قوانین کی سنگین خلاف ورزی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس سازش میں ایرانی حکومت کے مبینہ کردار پر اسے جوابدہ ہونا پڑے گا۔ بتایا گیا ہے کہ اس سازش کی تیاری میں جن افراد پر فرد جرم عائد کی گئی ہے، ان دونوں کا تعلق ایران ہی سے ہے۔

ایرک ہولڈر کے بہ قول اس سازش کی تیاری میں جن افراد پر فرد جرم عائد کی گئی ہے، ان دونوں کا تعلق ایران ہی سے ہے۔ چھپن سالہ منصور اربابسیار ایرانی نژاد امریکی شہری ہے جبکہ دوسرے کا نام غلام شکوری ہے، جو پاسداران انقلاب کی القدس نامی فورس کا رکن ہے۔ ہولڈر کے مطابق یہ سازش القدس فورس نے ایران میں تیار کی اور اس پر عملدرآمد کے لیے 1۔5 ملین ڈالر کی رقم مختص کی گئی تھی۔

سیٹلائٹ حملوں کی صلاحیت

مسٹر عابدی نے مزید کہا کہ میں پوچھنا چاہتا ہوں کہ کیا سعودی عرب کے پاس ایرانی دھمکیوں کا جواب ہے؟ انہیں [سعودی عرب] معلوم نہیں کہ ایران جب چاہے، ریاض کا امن تہہ و بالا کر سکتا ہے۔ سعودی عرب کو ایران کے خلاف الزامات کی قمیت اداء کرنا ہو گی۔

بنیاد پرست رکن پارلیمنٹ نے یہ بات زور دیکر کہی کہ ایرانی فوج، سعودی عرب کے خلاف کسی بھی اقدام کی بھرپور صلاحیت رکھتی ہے۔ ہم پورے سعودی عرب پر بہ آسانی قبضہ کر سکتے ہیں۔

یاد رہے کہ اسی رکن پارلیمنٹ نے گذشتہ ہفتے اعلان کیا تھا کہ ایرانی انٹلیجنس کو اسرائیلی خفیہ اداروں میں نفوذ کی کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ اس کامیابی کے بل پر تہران کو ایسی اہم معلومات ملی ہیں کہ جو کسی بھی فوجی مڈبھڑ کے موقع پر کام آ سکتی ہیں۔

رکن پارلیمنٹ محمد کریم عبادی کا مذکورہ بیان اسرائیل کے اس اعلان کے بعد سامنے آیا جس میں کہا گیا تھا کہ اسرائیل جاسوسی کی خاطر ایران کی فضاء میں منصوعی سیارہ چھوڑنے والا ہے۔

مسٹرعابدی نے کہا کہ ایران کے پاس مصنوعی سیارے سے بھیجی جانے والی معلومات میں تشویش پیدا کرنے کی صلاحیت ہے۔ انہوں نے مزید دعوی کیا کہ ایرانی بحریہ نے خلیج میں امریکی بحری ہدف کی جانب بغیر پائلٹ جاسوسی طیارہ بھجوانے میں کامیابی حاصل کی ہے۔